We are committed to reporting the facts and in all situations avoid the use of emotive terms.

بریکنگ نیوز
english logo

پاکستان کی بقاء اور سلامتی کیلئے تمام مکاتب فکر متحد ہیں، طاہر اشرفی

پاکستان کی بقاء اور سلامتی کیلئے تمام مکاتب فکر متحد ہیں، طاہر اشرفی

انتہاء پسندی کے خاتمے کیلئے مدارس اور مساجدکردار ادا کر رہے ہیں،اجتماع سے خطاب
لاہور (یو این این)انتہاء پسندی اور دہشت گردی کے خاتمے کیلئے مدارس اور مساجد اپنا بھرپور کردار ادا کر رہے ہیں، عالم اسلام کو انتہاء پسندی اور دہشت گردی کے خلاف متحد ہو کر جنگ لڑنی ہے ، پاکستان کی بقاء ، سلامتی اور تحفظ کیلئے مدارس عربیہ نے پہلے بھی کردار ادا کیا ہے اور آئندہ بھی ادا کرتے رہیں گے، پاکستان دشمن قوتوں کو واضح پیغام دینا چاہتے ہیں کہ پاکستان کی بقاء اور سلامتی کیلئے تمام مکاتب فکر اور مذاہب کے ماننے والے متحد ہیں ، بین المذاہب مکالمہ اور بین المسالک رواداری کیلئے پاکستان علماء کونسل نے ماضی میں بھی کردار ادا کیا ہے اور آئندہ بھی کرتی رہے گی ، یہ بات پاکستان علماء کونسل کے مرکزی چیئرمین اور وفاق المساجد پاکستان کے صدر حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے جامعہ عبد اللہ بن مسعود کے سالانہ اجتماع کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہی ، اجتماع کی صدارت مولانا مفتی حبیب الرحمن درخواستی نے کی ، اس موقع پر مولانا عبد الکریم ندیم، قاضی مطیع اللہ سعیدی، مولانا اسید الرحمن سعید، مولانا محمد اشفاق پتافی ، مولانا محمد احمد ندیم ، مولانا سیف الرحمن درخواستی، مولانا اسد درخواستی، مولانا عبد الرؤف فاروقی ، مولانا فہیم الحسن تھانوی، مولانا سید محمد یوسف شاہ ، مولانا سعد اللہ شفیق ، مولانا مفتی عبد الستار اور دیگر قائدین نے بھی خطاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کی بقاء اور سلامتی نظام مصطفی کے ساتھ ہے ، خلافت راشدہ کا نظام ہی پاکستان کو مضبوط اور مستحکم رکھ سکتا ہے ، عقیدہ ختم نبوت پر حملہ آور ہونے والے پارلیمنٹ کے اراکین اور وزراء کو سامنے نہ لایا گیا تو آئندہ انتخابات میں ان تمام جماعتوں اور افراد کا پاکستانی قوم بائیکاٹ کرے گی جو تحفظ ختم نبوت کے قانون کے خاتمے میں شریک تھے ، انہوں نے کہا کہ راجہ ظفر الحق کی رپورٹ کو فوری منظر عام پر لایا جائے اور مجرمین کو فوری کیفر کردار تک پہنچایا جائے ۔ پاکستان علماء کونسل کے مرکزی چیئرمین حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ انتہاء پسندی اور دہشت گردی کے خاتمے کیلئے ملک کے سلامتی کے اداروں اور پاک فوج کو مکمل تعاون کا یقین دلاتے ہیں، پاکستان کے علماء ، مشائخ اور مدارس نے ہمیشہ صبر کے دامن کو پکڑے رکھا ہے ، 8 ہزار علماء دہشت گردی کا نشانہ بنے ، دس سے زائد مرتبہ تبلیغی جماعت پر خود کش حملے کیے گئے لیکن نہ کبھی انتقام کی بات کی ہے اور نہ ہی کبھی پاکستان میں عدم استحکام پیدا کرنے کی کوشش کی ہے ۔انہوں نے کہا کہ مولانا عبید اللہ سندھی ؒ کے فلسفے امن ، دیانت اور امانت کے امین ہیں اور جو لوگ دین کے نام پر ملک و ملت کو یرغمال بنا کر اپنے مفادات لینا چاہتے ہیں ،مدارس اور مساجد ان کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے ، انہوں نے کہا کہ پاکستان میں 30 لاکھ طلباء مدارس میں پڑھتے ہیں لیکن کبھی مدارس اور مساجد نے ملک و ملت کیلئے مسائل پیدا نہیں کیے ، ہمیں پاکستان کا امن اور استحکام عزیز ہے ، پاکستان کا پرچم قائد اعظم محمد علی جناح نے علامہ شبیر احمد عثمانی کے سپرد کیا تھا اور اس پرچم کی سربلندی کیلئے ہم اپنی جانیں قربان کرتے رہیں گے ، انہوں نے کہا کہ چیف جسٹس آف پاکستان کمیشن قائم کریں کہ پاکستان میں انتہاء پسندی اور دہشت گردی پھیلانے والے عناصر کون ہیں اور ان کا سدباب کیسے کیا جانا چاہیے ، انہوں نے کہا کہ ہم سپہ سالار قوم جنرل قمر جاوید باجودہ کو مکمل یقین دلاتے ہیں کہ پاکستان کے خلاف امریکہ ، بھارت ، اسرائیل اور افغانستان کے خفیہ اداروں کی سازشوں کے مقابلے کیلئے پوری قوم افواج پاکستان کے ساتھ ہے اور دشمنوں کی ہر سازش کو ناکام بنایا جائے گا، انہوں نے کہا کہ آج پاکستان اور سعودی عرب کو کمزور کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے اور وہ قوتیں جو یہ دعویٰ کرتی ہیں کہ اگر سعودی عرب پر خدانخواستہ قبضہ ہو گیا تو وہ مکہ اور مدینہ اور بیت اللہ اور روضہ رسول پر حملہ آور ہوں گی ، ان کے مقابلے کیلئے پوری امت کو متحد ہونا ہے ، انہوں نے کہا کہ پاکستان کو اپنی داخلہ اور خارجہ پالیسی اپنے مفادات کے مطابق بنانی چاہیے ، اگر ایران چاہ بہار بندرگاہ ہندوستان کو اپنے مفادات کیلئے دے سکتا ہے تو پاکستان کو بھی اپنے مفادات کیلئے غور و فکر کرنا چاہیے اور ہماری داخلہ اور خارجہ پالیسی کو ہر طرح کے دباؤ سے آزاد ہونا چاہیے ۔

Translation

اداریہ

آج کی تصویر

مقبول ترین

Whatsapp نیوز سروس

Advertise Here

ضرورت نمائیندگان

روزنامہ جواب

ضرورت نمائیندگان

Coverage

Currency

WP Facebook Auto Publish Powered By : XYZScripts.com