We are committed to reporting the facts and in all situations avoid the use of emotive terms.

بریکنگ نیوز
english logo

پنجاب کے تمام اضلاع کے ساتھ مساوی سلوک کیا جائے گا، مخدوم ہاشم

پنجاب کے تمام اضلاع کے ساتھ مساوی سلوک کیا جائے گا، مخدوم ہاشم

بجٹ سیشن میں کسی کی تجویز رد نہیں کی جائیگی ، جو تجاویز اس بجٹ کا حصہ نہیں بن سکیں اُنھیں آئندہ بجٹ میں شامل کیا
سابق حکومت نے حکمرانی کا حق ادا کیا نہ اُنھیں اپوزیشن ہی کرنی آئی، صوبائی وزیر خزانہ کا بجٹ سیشن میں خطاب
لاہور(یو این این)بجٹ سازی کے عمل میں بحث کا کردار بہت اہم ہے خصوصاً اس وقت جب وہ اپوزیشن کی جانب سے کی جائے مگر افسوس کے سابق حکومت نے حکمرانی کا حق ادا کیا نہ اُنھیں اپوزیشن ہی کرنی آئی۔ بجٹ بحث میں حصہ نہ لے کرانھوں نے ایکبار پھر ان لوگوں کی جانب اپنے فرائض سے کوتاہی برتی جنھوں نے ان پر اعتماد کا اظہار کیا۔ ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر خزانہ مخدوم ہاشم جواں بخت نے بدھ کے روز صوبائی اسمبلی میں بجٹ کی بحث کو سمیٹتے ہوئے اپنی تقریر میں کیا۔ صوبائی وزیر نے حکومتی اراکین کا شکریہ کیا کہ انھوں نے انفرادی سوچ اپنانے کی بجائے صوبے کے اجتماعی مسائل پر فوکس کیا اور اپنی ترجیحات کی درجہ بندی کرتے ہوئے پنجاب کی معاشی صورتحال کے مطابق منصوبہ جات کا انتخاب کیا ۔ انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت میں ہونے والا یہ بجٹ سیشن مختلف نوعیت کا سیشن ہے ۔ یہاں کسی کی کوئی تجویز رد نہیں کی جائے گی ۔جو تجاویز اس بجٹ کا حصہ نہیں بن سکیں اُنھیں آئندہ بجٹ میں شامل کیا ۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ ایوان میں بیان کئے جانے والے بیشتر مسائل تعلیم، صحت ،زراعت اور صاف پانی سے متعلق ہیں جو پہلے سے بجٹ کا حصہ ہیں۔ انہوں نے حکومتی اراکین کو یقین دلایا کہ موجودہ حکومت پورے پنجاب کی حکومت ہے اس میں پنجاب کے تمام اضلاع کے ساتھ مساوی سلوک کیا جائے گا۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت جنوبی پنجاب کو نظر انداز کرے گی نہ جھنگ اور اٹک جیسے علاقوں کے ساتھ زیادتی ہو گی۔ صوبائی وزیر نے ایوان کو ہیومن ڈویلپمنٹ انڈس کی حالیہ تحقیق سے آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ رپورٹ کی رینکنگ میں پاکستان انسانی ترقی کے اعتبار سے اوپر جانے کی بجائے نیچے آیا ہے جو ہمارے لیے لمحہ فکریہ ہے صوبائی وزیر نے ہیومن ڈویلپمنٹ کے لیے پلاننگ اینڈ ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ تک محدود رہنے کی بجائے بین الاقوامی تحقیق سے استفادے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ایسے حالات میں جب ہم ہیومن ڈویلپمنٹ کے شعبہ میں ابتری کا شکار ہیں ضروری تھا کہ حکومت سوشل سیکٹر پر فوکس کرتی اس لیے پنجاب حکومت نے بجٹ میں زیادہ تر فوکس تعلیم ،صحت اور کاروبار پر رکھا۔ انہوں نے کہا کہ بجٹ میں SMEsاور ایسے کاروبار جو خسارے میں جارہے ہیں ان پر سرمایہ کاری کے لیے مخصوص پیکج رکھا گیا ہے ۔ صوبائی وزیر نے کابینہ کی جانب سے اپنے متعلقہ محکموں کے اخراجات پر کنٹرول اور آئندہ بجٹ کے لیے گنجائش میں اضافے کی کوششوں کو بھی سراہا۔

Translation

اداریہ

آج کی تصویر

مقبول ترین

Whatsapp نیوز سروس

Advertise Here

ضرورت نمائیندگان

روزنامہ جواب

ضرورت نمائیندگان

Coverage

Currency

WP Facebook Auto Publish Powered By : XYZScripts.com