We are committed to reporting the facts and in all situations avoid the use of emotive terms.

بریکنگ نیوز
english logo

ماں اور بچے کی صحت، پنجاب حکومت اور ڈیفڈ کا تعاون بڑھانے کا فیصلہ

ماں اور بچے کی صحت، پنجاب حکومت اور ڈیفڈ کا تعاون بڑھانے کا فیصلہ

برطانوی ادارہ برائے بین الاقوامی ترقی ’ڈیفڈ‘ کے نمائندے جنال شاہ کی سیکرٹری ہیلتھ سے ملاقات
100 روزہ پلان کے تحت سب سے زیادہ توجہ ہسپتالوں کی ایمرجنسی پر دی جارہی ہے، ثاقب ظفر

لاہور(یو این این )صوبائی محکمہ صحت اور برطانوی ادارے ’ڈیفڈ‘ نے پنجاب میں ماں اور بچے کی صحت کے پروگرام میں تعاون بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سلسلے میں برطانیہ کے ادارہ برائے بین الاقوامی ترقی ’ڈیفڈ‘لاہور کے ہیڈ جنال شاہ نے سیکرٹری ہیلتھ پنجاب ثاقب ظفر سے ان کے دفتر میں ملاقات کی اور شعبہ صحت میں جاری مشترکہ منصوبوں پر تبادلہ خیال کیا۔ سیکرٹری ہیلتھ نے برطانوی نمائندے کو صحت کے شعبے میں حکومتی ترجیحات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ 100 روزہ پلان کے تحت سب سے زیادہ توجہ ہسپتالوں کی ایمرجنسی پر دی جارہی ہے۔اس کے علاوہ وسط اور طویل مدتی اصلاحات بھی متعارف کرائی جارہی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ حال ہی میں نئی ہیلتھ پالیسی کی تیاری کے لئے محکمہ صحت اور بین الاقوامی پارٹنر اداروں کے تعاون سے مشاورتی ورکشاپ کا کامیاب انعقاد کیا گیا اور اب ہیلتھ پالیسی کے لئے ماہرین کی سفارشات پر غور کا عمل جاری ہے۔ ثاقب ظفر نے اس بات پر اطمینان کا اظہار کیا کہ یو ایس ایڈ،ڈیفڈ، یونیسیف جیسے عالمی ادارے صحت و تعلیم کے شعبے کی ترقی میں اہم کردار ادا کررہے ہیں۔بالخصوص صحت کے شعبے کو نچلی سطح تک مضبوط کرنے پر مربوط انداز میں کام ہورہا ہے۔اس موقع پر جنال شاہ نے بتایا کہ برطانوی ادارہ ڈیفڈ پنجاب میں ہیلتھ انفراسٹرکچر کا استحکام چاہتا ہے۔ ہمارا زیادہ فوکس ماں اور بچے کی صحت کے پروگرام پر ہے۔ انہوں نے اس بات پر خوشی کا اظہار کیا کہ وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد طبی اہداف کے حصول کے لئے منظم انداز میں آگے بڑھ رہی ہیں۔

Translation

اداریہ

آج کی تصویر

مقبول ترین

Whatsapp نیوز سروس

Advertise Here

ضرورت نمائیندگان

روزنامہ جواب

ضرورت نمائیندگان

Coverage

Currency

WP Facebook Auto Publish Powered By : XYZScripts.com