We are committed to reporting the facts and in all situations avoid the use of emotive terms.

بریکنگ نیوز
english logo

شاہد خاقان ملکی خزانے کو کھربوں کا چونا لگانے کے بعد کس منہ سے تنقید کر رہے ہیں، چوہان عمران خان نے بڑے تدبر اور کمال سے معیشت کی ڈوبتی ناؤ کو سہارا دیا، صوبائی وزیر اطلاعات کا رد عمل لاہور(یو این این ) صوبائی وزیر برائے اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ یہ پاکستان کی بدقسمتی ہے کہ جس کی بھی کرپشن کی دم پر پاؤں رکھو اس کو ملک، معیشت اور جمہوریت یاد آجاتی ہے۔LNGکے حوالے سے لوٹ مار کرنے کے بعد بھی شاہد خاقان عباسی جیسے سیاستدان صرف 4ما ہ کی حکومت پر تنقید کر رہے ہیں۔ دنیا کے کسی بھی تھکے ہوئے ماہر معاشیات سے پوچھ لیں کہ 4ماہ میں معیشت کیسے بن سکتی ہے؟ ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر برائے اطلاعات وثقافت فیاض الحسن چوہان نے جمعہ کے روز اپنے ایک بیان میں کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ کسی ملک کی معیشت کو اپنے پیروں پہ کھڑا کرنے کے لیے کم از کم پانچ سال کا وقت چاہیے ہوتا ہے۔ بدقسمتی سے شاہد خاقان عباسی صاحب اور ان کی حکومت کی کرتوتیں ایسی تھیں جن کی بدولت ہماری معیشت اس حد تک بے حال ہے۔ان کی تو یہ خواہش تھی کہ ملک خدانخواستہ دیوالیہ ہوجائے اور عمران خان اسے سنبھال نہ سکیں۔لیکن عمران خان صاحب نے بڑے تدبر اور کمال کے ساتھ دوسرے ممالک سے معاشی تعلقات بنائے اور ملک کی معیشت کی ڈوبتی ناؤ کو سہارا دیا۔ مقام حیرت ہے کہ شاہد خاقان صاحب ملکی خزانے کو اربوں کھربوں کا چونا لگانے کے بعد کس منہ سے تنقید کر رہے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ نیب ایک آزاد اور خودمختار ادارہ ہے۔ آل شریف اور ان کے حواریوں کو پہلے نیب سے کوئی مسئلہ نہیں تھا کیونکہ یہ ادارہ ان کے ہاتھوں کی کٹھ پتلی تھا، لیکن اب جبکہ نیب کا ادارہ غیر جانبدار ہوکر کام کر رہا ہے اور ان کی کرپشن پر بلا امتیاز ہاتھ ڈال رہا ہے تو یہ اسے ظالمانہ اور کالا قانون کا نام دیتے ہیں۔اب یہ چاہتے ہیں کہ انہیں کھلا چھوڑ دیا جائے تاکہ یہ دونوں ہاتھوں سے ملک کو لوٹیں۔پچھلے 10سال کی تاریخ کھول کردیکھ لیں ہرسال منی بجٹ آئے ہیں کیا اس کامطلب معیشت کو کمزور کرنا ہے؟ عوام بہتر جانتے ہیں کہ خطرہ ہرگز عوام اور پاکستان کو نہیں بلکہ ان لوگوں کو ہے اور ان کی سیاست اور لوٹ مار کو ہے۔پاکستان کا مستقبل بہت اچھا ہونے والا ہے کیونکہ اب حکمران چور نہیں ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ انہیں ڈر ہے کہ عمران خان کی قیادت میں پاکستان تحریک انصاف کی حکومت جب تک رہے گی یہ برباد ہوتے رہیں گے۔ پاکستان ترقی کرے گا اور جلنے والوں کا منہ کالا ہوگا ،پاکستان کے اندر بھی اورباہر بھی ۔

شاہد خاقان ملکی خزانے کو کھربوں کا چونا لگانے کے بعد کس منہ سے تنقید کر رہے ہیں، چوہان عمران خان نے بڑے تدبر اور کمال سے معیشت کی ڈوبتی ناؤ کو سہارا دیا، صوبائی وزیر اطلاعات کا رد عمل لاہور(یو این این ) صوبائی وزیر برائے اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ یہ پاکستان کی بدقسمتی ہے کہ جس کی بھی کرپشن کی دم پر پاؤں رکھو اس کو ملک، معیشت اور جمہوریت یاد آجاتی ہے۔LNGکے حوالے سے لوٹ مار کرنے کے بعد بھی شاہد خاقان عباسی جیسے سیاستدان صرف 4ما ہ کی حکومت پر تنقید کر رہے ہیں۔ دنیا کے کسی بھی تھکے ہوئے ماہر معاشیات سے پوچھ لیں کہ 4ماہ میں معیشت کیسے بن سکتی ہے؟ ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر برائے اطلاعات وثقافت فیاض الحسن چوہان نے جمعہ کے روز اپنے ایک بیان میں کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ کسی ملک کی معیشت کو اپنے پیروں پہ کھڑا کرنے کے لیے کم از کم پانچ سال کا وقت چاہیے ہوتا ہے۔ بدقسمتی سے شاہد خاقان عباسی صاحب اور ان کی حکومت کی کرتوتیں ایسی تھیں جن کی بدولت ہماری معیشت اس حد تک بے حال ہے۔ان کی تو یہ خواہش تھی کہ ملک خدانخواستہ دیوالیہ ہوجائے اور عمران خان اسے سنبھال نہ سکیں۔لیکن عمران خان صاحب نے بڑے تدبر اور کمال کے ساتھ دوسرے ممالک سے معاشی تعلقات بنائے اور ملک کی معیشت کی ڈوبتی ناؤ کو سہارا دیا۔ مقام حیرت ہے کہ شاہد خاقان صاحب ملکی خزانے کو اربوں کھربوں کا چونا لگانے کے بعد کس منہ سے تنقید کر رہے ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ نیب ایک آزاد اور خودمختار ادارہ ہے۔ آل شریف اور ان کے حواریوں کو پہلے نیب سے کوئی مسئلہ نہیں تھا کیونکہ یہ ادارہ ان کے ہاتھوں کی کٹھ پتلی تھا، لیکن اب جبکہ نیب کا ادارہ غیر جانبدار ہوکر کام کر رہا ہے اور ان کی کرپشن پر بلا امتیاز ہاتھ ڈال رہا ہے تو یہ اسے ظالمانہ اور کالا قانون کا نام دیتے ہیں۔اب یہ چاہتے ہیں کہ انہیں کھلا چھوڑ دیا جائے تاکہ یہ دونوں ہاتھوں سے ملک کو لوٹیں۔پچھلے 10سال کی تاریخ کھول کردیکھ لیں ہرسال منی بجٹ آئے ہیں کیا اس کامطلب معیشت کو کمزور کرنا ہے؟ عوام بہتر جانتے ہیں کہ خطرہ ہرگز عوام اور پاکستان کو نہیں بلکہ ان لوگوں کو ہے اور ان کی سیاست اور لوٹ مار کو ہے۔پاکستان کا مستقبل بہت اچھا ہونے والا ہے کیونکہ اب حکمران چور نہیں ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ انہیں ڈر ہے کہ عمران خان کی قیادت میں پاکستان تحریک انصاف کی حکومت جب تک رہے گی یہ برباد ہوتے رہیں گے۔ پاکستان ترقی کرے گا اور جلنے والوں کا منہ کالا ہوگا ،پاکستان کے اندر بھی اورباہر بھی ۔

Translation

اداریہ

آج کی تصویر

مقبول ترین

Whatsapp نیوز سروس

Advertise Here

ضرورت نمائیندگان

روزنامہ جواب

ضرورت نمائیندگان

Coverage

Currency

WP Facebook Auto Publish Powered By : XYZScripts.com