We are committed to reporting the facts and in all situations avoid the use of emotive terms.

بریکنگ نیوز
english logo

سابق حکومت کے منصوبے ختم نہیں کریں گے ، کرپشن روکیں گے ، فیاض الحسن چوہان

سابق حکومت کے منصوبے ختم نہیں کریں گے ، کرپشن روکیں گے ، فیاض الحسن چوہان

یت شعاری پالیسی وزراءاور ارکان اسمبلی تک محدود نہیں رہے گی، بیوروکریسی کو بھی اس کے دائرہ کار میں لایا جائے گا
کمیٹیاں تشکیل دیدی گئیں ، ڈیڑھ ماہ میں سفارشات پیش کریں گی جن پر عملدرآمد ہو گا ، کابینہ اجلاس پر میڈیا کو بریفنگ
لاہور (یو این این ) صوبائی وزیر اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ پنجاب کابینہ نے وزیر اعظم عمران خان کے ویژن کی تکمیل کےلئے ایک ماہ کی تنخواہیں ڈیمز فنڈ ز میں دینے کااعلان کیا ہے ، انہوں نے کہا ہے کہ ماضی کی روایات کے برعکس پی ٹی آئی کی حکومت سابق دور حکومت کے منصوبوں کو ختم نہیںکرے گی تاہم ان منصوبوں سے کرپشن ختم کر کے عوام کےلئے فائدہ مند بنانے کےلئے کمیٹیاں تشکیل دیدی ہیں ۔کفایت شعاری پالیسی وزراءاور ارکان اسمبلی تک محدود نہیں رہے گی، بیوروکریسی کو بھی اس کے دائرہ کار میں لایا جائے گا ،ہمارے پاس 100 دن پلان میں سے 79 دن باقی رہ گئے ہیں اور کمیٹیاں ڈیڑھ ماہ میں پالیسیاں اور قانون سازی کے حوالے سے سفارشات حکومت کو پیش کریں گی جن کی حتمی منظوری کے بعد عملدرآمد شروع کر دیا جائے گا۔ہفتہ کے روز محکمہ تعلقات عامہ پنجاب کے دفتر میں پریس کانفرنس میں کابینہ کے دوسرے اجلاس کی بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ سابق حکومت نے گڈ گورنس کی آڑ میں بیڈ گورنس کی انتہا کر دی ، وزراءاور بیوروکریٹس کونوازنے کےلئے ایک محکمہ کو 3,3 اور 4,4 محکموں میں تبدیل کر دیا گیا جس سے عملی کارکردگی زیرو رہی اور عوام کو کوئی فائدہ نہ پہنچ سکا ، سابق حکومت نے پچھلی حکومت کی ترقیاتی منصوبوں کو مکمل نہیں کیا اور کام روک دیا جس سے عوام کے ساتھ قومی خزانے کو بھی نقصان پہنچا ، لیکن وزیر اعظم عمران خان نے ہدایات دی ہیں کہ پچھلی حکومت کے کسی منصوبے کو نہ روکا جائے بلکہ اسے جلد از جلد مکمل کیا جائے لیکن کرپشن کا سدباب کیا جائے ۔کابینہ نے سابق حکومت کے منصوبوں میں ہونے والی کرپشن عوام کے سامنے لانے کےلئے اور ان منصوبوں کو عوام کےلئے فائدہ مند بنانے کےلئے کمیٹیاں تشکیل دیدی ہیں ۔ پنجاب پولیس کو غیر سیاسی بنانے کےلئے آئی جی ناصر درانی کی چیئرمین شپ میں پولیس اصلاحات کمیٹی قائم کر دی گئی ہے جس میں پولیس اور مختلف محکموں سے ممبران کو لیا گیا ہے ، یہ کمیٹی ڈیڑھ ماہ میں اپنی سفارشات پنجاب حکومت کو پیش کرے گی جس پر عملدرآمد کے بعد غریب عوام کو پولیس سے پریشانی کی بجائے سکون ملے گا ، افسران کے پاس گاڑیوں کے حوالے سے کمیٹی تفصیلی رپورٹ پیش کرے گی جس میں گریڈ 17 سے 22 تک کے افسران کے پاس کون سی اور کتنی گاڑیا ں ہیں ، ضروری گاڑیوں کو چھوڑ کر باقی کو نیلام کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ کابینہ اجلاس میں اورنج لائن ٹرین کا تفصیلی جائزہ لیا گیا اورانتظامیہ کی جانب سے کرپشن کے انتہائی خوفناک حقائق سامنے لائے گئے ، اس ضمن میں کمیٹی ڈیڑھ ماہ میں اپنی رپورٹ پنجاب حکومت کو پیش کرے گی جس کے بعد کرپشن کے ہوش ربا حقائق عوام کے سامنے لائے جائیں گے ۔ پاور پراجیکٹس پچھلی حکومت کی کرپشن اور نااہلی کے سبب ناکام ہوئے ، صرف قائد اعظم سولر پراجیکٹ میں بڑے پیمانے پر کرپشن سامنے آئی ہے جس کے بارے میںدعویٰ کیا جاتا رہا ہے کہ 100 میگا واٹ بجلی پیدا ہو رہی ہے لیکن حقیقت میں صرف 18 میگاواٹ بجلی پیدا ہو رہی ہے ۔79 دنوں میں لوکل باڈیز کا ایسا مضبوط ، مربوط اور موثر بلدیاتی نظام لائیں گے جس میں ضلعی حکومتیں عملی طور پر بااختیار ہوں گی اور عوام کو براہ راست فائدہ پہنچے گا ۔جنوبی پنجاب ورکنگ گروپن کو بھی متنبہ کیا گیا ہے کہ 79 دنوں میں جنوبی پنجاب کو انتظامی طور پر الگ کرنے کےلئے سفارشات وزیر اعظم کو پیش کرے۔ میٹرو بس منصوبہ میں بھی بڑے پیمانے پر کرپشن سامنے آئی ہے اور پنجاب حکومت ماہانہ 2 ارب روپے صرف سبسڈی کی مد میں دے رہی ہے جبکہ میٹرو پشاور کو کسی قسم کی سبسڈی نہیں دی جائے گی ۔کڈنی ٹرانسپلانٹ پراجیکٹ میں کرپشن کو روک کر اس منصوبے کو جاری رکھا جائے گا، انٹی کرپشن اسٹیبلشمنٹ پنجاب میں اصلاحات کےلئے کمیٹی بھی ڈیڑھ ماہ میں رپورٹ پیش کرے گی ، ڈاکٹر یاسمین راشد کی سربراہی میں کمیٹی محکمہ صحت کو یکجا کرنے کے لئے اپنی سفارشات مرتب کر رہی ہے ۔

Translation

اداریہ

آج کی تصویر

مقبول ترین

Whatsapp نیوز سروس

Advertise Here

ضرورت نمائیندگان

روزنامہ جواب

ضرورت نمائیندگان

Coverage

Currency

WP Facebook Auto Publish Powered By : XYZScripts.com